شہید کا درجہ

لجنہ اماء اللہ جرمنی کے رسالہ ’’خدیجہ‘‘ (شہداء نمبر۔ شمارہ 2۔2010ء) میں شہید کے درجے کے حوالے سے یہ حدیث بیان ہوئی ہے کہ آنحضرت ﷺ نے فرمایا کہ جنت میں داخل ہونے کے بعد کوئی بھی واپس آنے کی کوشش نہیں کرتا سوائے شہید کے جو شہادت کے رُتبے کا اعزاز و اکرام دیکھ …مزید پڑھیں

اخلاص ہے دستورِ غلامانِ خلافت – نظم

ماہنامہ ’’مصباح‘‘ ربوہ مئی 2011ء میں شائع ہونے والی ایک نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: اخلاص ہے دستورِ غلامانِ خلافت تسلیم سے مشروط ہے پیمانِ خلافت یہ لعلِ نبوّت تو ہے اک گوہرِ یکتا بعد اس کے گراں مایہ ہے مرجانِ خلافت استادؐ سے شاگردؑ نے وہ فیض ہے پایا وہ شانِ نبوّت …مزید پڑھیں

خلافتِ احمدیہ کی ایک عظیم برکت = کنواری اقوام ۔ احمدیت کی آغوش میں

حضرت مسیح موعودؑ کے طفیل جو عالمی انقلاب مقدر ہے اس کا ایک پہلو ان اقوام سے تعلق رکھتا ہے جنہیں مذہبی اصطلاح میں کنواری اقوام قرار دیا گیا ہے۔ دراصل بہت سی پیشگوئیاں استعاروں کی زبان میں کی جاتی ہیں اور ان کا صحیح مفہوم اس وقت تک مخفی رہتا ہے جب تک خدا …مزید پڑھیں

خلافتِ احمدیہ کے مقام کے حوالے سے منتخب اشعار

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 25؍مئی 2013ء میں خلافتِ احمدیہ کے مقام کے حوالے سے منتخب اشعار شامل ہیں۔ ان میں سے بعض قبل ازیں ’’الفضل ڈائجسٹ‘‘ کا حصہ بنائے جاچکے ہیں۔ دیگر ذیل میں ہدیۂ قارئین ہیں: مکرم محمد صدیق امرتسری صاحب کے کلام سے انتخاب: امام وقت جب بھی منتخب ہوگا مشیت سے بدل جائیں …مزید پڑھیں

حضرت خلیفۃالمسیح الاوّلؓ کے شب و روز

مکرم قریشی محمود احمد صاحب ریٹائرڈ اسسٹنٹ سپرنٹنڈنٹ جیل نے حضرت خلیفۃ المسیح الاول رضی اللہ عنہ کے کچھ حالات ’’الفضل‘‘ 16؍ستمبر1955ء میں شائع کرائے تھے ان کی والدہ حضورؓ کی حقیقی بھتیجی تھیں۔ یہ خوبصورت مضمون روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 23؍مئی 2014ء میں مکرّر شائع ہوا ہے۔ محترم قریشی صاحب رقمطراز ہیں کہ میری پیدائش …مزید پڑھیں

خلافت کی اطاعت اور بے مثال رعب

روزنامہ‘‘الفضل’’ربوہ 23؍مئی 2014ء میں مکرم ڈاکٹر طارق احمدمرزاصاحب (آسٹریلیا) بیان کرتے ہیں کہ غالباً 1988ء کی بات ہے۔ خاکسار ان دنوں گلاسگو میں مقیم تھا۔ جلسہ سالانہ لندن میں شمولیت کا پروگرام بنا تو ایک ہندو دوست مکرم نندا صاحب نے بھی ساتھ چلنے کی خواہش ظاہر کی۔ آپ جماعت کے کافی قریب اور اس …مزید پڑھیں

سانحہ لاہور کے واقعات و مشاہدات

(مطبوعہ الفضل ڈائجسٹ 15مئی 2020ء) لجنہ اماء اللہ جرمنی کے رسالہ ’’خدیجہ‘‘ (شہداء نمبر۔ شمارہ2۔ 2010ء) میں مکرم ڈاکٹر رفاد عاصم صاحب نے سانحہ لاہور کا آنکھوں دیکھا حال قلمبند کیا ہے- آپ بیان کرتے ہیں کہ 28 مئی 2010ء کو خطبہ جمعہ کے وقت مَیں اپنے گیارہ سالہ بیٹے کے ساتھ احمدیہ مسجد دارالذکر …مزید پڑھیں

شہید کے معنی

لجنہ اماء اللہ جرمنی کے رسالہ ’’خدیجہ‘‘ (شہداء نمبر۔ شمارہ2۔2010ء) میں سیّدنا حضرت اقدس مسیح موعود علیہ السلام کا درج ذیل ارشاد شامل اشاعت ہے: ’’شہید کے معنی یہ ہیں کہ اس مقام پر اللہ تعالیٰ ایک خاص قسم کی استقامت مومن کو عطا کرتا ہے۔ وہ اللہ تعالیٰ کی راہ میں ہر مصیبت اور …مزید پڑھیں

مکرم وسیم احمد بٹ صاحب شہید

لجنہ اماء اللہ جرمنی کے رسالہ ’’خدیجہ‘‘ (شمارہ 2۔2010ء) میں مکرمہ پروین بٹ صاحبہ کے قلم سے محترم وسیم احمد بٹ صاحب شہید کا ذکرخیر شائع ہوا ہے۔ قبل ازیں شہید مرحوم کا مختصر تذکرہ 14؍فروری 2020ء کے شمارے کے ’’الفضل ڈائجسٹ‘‘ میں کیا جاچکا ہے۔ مکرم وسیم احمد بٹ صاحب کے دادا محترم غلام …مزید پڑھیں

مکرم کیپٹن مرزا نعیم الدین صاحب شہید

لجنہ اماء اللہ جرمنی کے رسالہ ’’خدیجہ‘‘ (شمارہ 2۔2010ء) میں محترم کیپٹن مرزا نعیم الدین صاحب شہید کا ذکرخیر مکرمہ امۃالودود طاہرہ صاحبہ اور مکرم مرزا عبدالحق صاحب کے قلم سے شائع ہوا ہے۔ شہید مرحوم کا ذکرخیر قبل ازیں الفضل انٹرنیشنل 8؍نومبر 2019ء کے کالم ’’الفضل ڈائجسٹ‘‘ میں شامل ہے۔ ذیل میں اضافی امور …مزید پڑھیں

احمدی شہید کا جنازہ

لجنہ اماء اللہ جرمنی کے رسالہ ’’خدیجہ‘‘ (شہداءنمبر- شمارہ 2۔2010ء) میں یہ اقتباس شامل ہے کہ ’’ذکر تھا کہ بعض چھوٹے گاؤں میں ایک ہی احمدی گھر ہے اور مخالف ایسے متعصّب ہیں کہ وہ کہتے ہیں کہ اگر کوئی احمدی مر جائے تو ہم جنازہ بھی نہ پڑھیں گے۔ حضرت صاحبؑ نے فرمایا کہ …مزید پڑھیں

مکرم شیخ شمیم احمد صاحب شہید

لجنہ اماء اللہ جرمنی کے رسالہ ’’خدیجہ‘‘ (شہداءنمبر- شمارہ 2۔ 2010ء) میں مکرمہ بشریٰ ممتاز شیخ صاحبہ کے قلم سے اُن کے بھتیجے محترم شیخ شمیم احمد صاحب شہید کا ذکرخیر شائع ہوا ہے۔ شہید لاہور مکرم شیخ شمیم احمد صاحب اپنے والد محترم شیخ نعیم احمد صاحب مرحوم کے اکلوتے بیٹے تھے۔ آپ حضرت …مزید پڑھیں

فینسنگ (Fencing)

ماہنامہ ’’تشحیذالاذہان‘‘ ربوہ اپریل 2011ء میں فینسنگ کے حوالہ سے ایک مختصر معلوماتی مضمون عزیزم ثمر احمد کے قلم سے شائع ہوا ہے۔ فینسنگ کا لفظ انگریزی محاورے میں تلوار کو خاص انداز میں استعمال کرنے کے لئے بولا جاتا ہے۔ یہ ان چار کھیلوں میں شامل ہے جو ہر سال اولمپک گیمز میں شامل …مزید پڑھیں

پیروں تلے زمیں نہیں سر پہ آسماں نہیں – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ یکم فروری 2013ء میں مکرمہ امۃالباری ناصر صاحبہ کی ایک غزل شامل اشاعت ہے۔ اس غزل میں سے انتخاب پیش ہے: پیروں تلے زمیں نہیں سر پہ آسماں نہیں لگتا ہے کُل جہان میں امن نہیں اماں نہیں اچھی خبر کے واسطے کان ترس ترس گئے خیر کی بات کہہ سکے ایسی …مزید پڑھیں

شب قدر کا خونی ڈرامہ اور قہری تجلّی

لجنہ اماء اللہ جرمنی کے رسالہ ’’خدیجہ‘‘ (شمارہ 2۔ 2010ء) میں مکرم فضل الٰہی انوری صاحب کے قلم سے محترم ریاض احمد صاحب شہید کا ذکرخیر شائع ہوا ہے۔ قبل ازیں شہید مرحوم کا مختصر تذکرہ 17؍جولائی 1998ء اور 10؍اپریل 2020ء کے شماروں کے ’’الفضل ڈائجسٹ‘‘ میں کیا جاچکا ہے۔ زیرنظر مضمون میں بیان کردہ …مزید پڑھیں

مکرم ڈاکٹر انعام الرحمٰن انور صاحب شہید

لجنہ اماء اللہ جرمنی کے رسالہ ’’خدیجہ‘‘ (شمارہ 2۔ 2010ء) میں مکرمہ امۃالحفیظ شوکت صاحبہ نے اپنے مرحوم شوہر محترم ڈاکٹر انعام الرحمٰن صاحب شہید کا ذکرخیر کیا ہے۔ قبل ازیں شہید مرحوم کا مختصر تذکرہ 31؍جنوری 2020ء کے شمارے کے کالم ’’الفضل ڈائجسٹ‘‘ میں کیا جاچکا ہے۔ مکرم ڈاکٹر انعام الرحمٰن صاحب 14؍جون 1936ء …مزید پڑھیں

شہدائے مونگ عزیزم یاسر احمد اور مکرم چودھری محمد اسلم کُلّاصاحب

لجنہ اماء اللہ جرمنی کے رسالہ ’’خدیجہ‘‘ (شمارہ 2۔ 2010ء) میں مکرمہ مبارکہ ارشد کُلّاصاحبہ نے اپنے چچا اور سسر مکرم چودھری محمد اسلم کُلّاصاحب اور اُن کے نوجوان بیٹے عزیزم یاسر احمد کا ذکرخیر کیا ہے۔ یہ دونوں17؍اکتوبر 2005ء کو نماز فجر کی ادائیگی کے دوران احمدیہ مسجد مونگ میں شہید کردیے گئے تھے۔ …مزید پڑھیں

مُردہ کون ہے؟

لجنہ اماء اللہ جرمنی کے رسالہ ’’خدیجہ‘‘ (شمارہ 2۔ 2010ء) میں سورۃالبقرہ آیت 155کی تفسیر بیان فرمودہ سیّدنا حضرت مصلح موعود رضی اللہ عنہ سے ایک اقتباس (مرسلہ: مکرمہ ریحانہ بشریٰ صاحبہ) شامل اشاعت ہے۔ حضورؓ فرماتے ہیں کہ جس شخص کا کام جاری رکھنے والے لوگ پیچھے باقی ہوں اُس کی نسبت بھی کہتے …مزید پڑھیں

طنز کے تیر چلاتے ہیں جو ہر جانے انجانے پہ – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 9؍جنوری 2013ء میں محترمہ صاحبزادی امۃالقدوس صاحبہ کی ایک خوبصورت نظم شامل اشاعت ہے۔ اس طویل نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: طنز کے تیر چلاتے ہیں جو ہر جانے انجانے پہ شک کی نظریں ڈالتے رہتے ہیں اپنے بیگانے پہ چھوڑ انہیں جو لوگ کہ بگڑے جاتے ہیں سمجھانے پہ …مزید پڑھیں

مکرم شیخ اشرف پرویز صاحب شہید مکرم شیخ مسعود جاوید صاحب شہید اور مکرم شیخ آصف مسعود صاحب شہید

لجنہ اماء اللہ جرمنی کے رسالہ ’’خدیجہ‘‘ (شمارہ 2۔ 2010ء) میں مکرمہ عائشہ احمد صاحبہ نے اپنے شہید تایا، شہید والد اور شہید بھائی کا ذکرخیر کیا ہے جن کی کار پر یکم اپریل 2010ء کی رات فیصل آباد میں اُس وقت اندھادھند فائرنگ کی گئی جب وہ اپنی دکان بند کرکے واپس گھر آرہے …مزید پڑھیں

رسالہ ’’خدیجہ‘‘ کا شہداء نمبر

حضرت مسیح موعود علیہ السلام فرماتے ہیں: ’’شہید کا مقام وہ مقام ہے جہاں وہ گویا اللہ تعالیٰ کو دیکھتا اور مشاہدہ کرتا ہے۔ یعنی اللہ تعالیٰ کی ہستی اس کی قدرتوں اور تصرّفات پر وہ اس طرح ایمان لاتا ہے جیسے کسی چیز کو انسان مشاہدہ کرلیتا ہے۔ جب اس حالت پر انسان پہنچ …مزید پڑھیں

محترم چودھری محمد اشرف صاحب شہید

لجنہ اماء اللہ جرمنی کے رسالہ ’’خدیجہ‘‘ شمارہ 2۔2010ء میں مکرمہ مسرت بخاری صاحبہ کے قلم سے محترم چودھری محمد اشرف صاحب شہید کا ذکرخیر شائع ہوا ہے۔ قبل ازیں شہید مرحوم کا مختصر تذکرہ 22؍نومبر 2019ء کے شمارے کے ’’الفضل ڈائجسٹ‘‘ میں کیا جاچکا ہے۔ مکرم چودھری محمد اشرف صاحب کی پیدائش مکرم محمدخان …مزید پڑھیں

گالف

ماہنامہ ’’تشحیذالاذہان‘‘ ربوہ جنوری 2011ء میں گالف (Golf) کے بارہ میں ایک معلوماتی مضمون عزیزم ارباب احمد کے قلم سے شامل اشاعت ہے۔ سکاٹ لینڈ کا قومی کھیل گالف ہے جو ممکنہ طور پر جرمن زبان کے لفظ‘‘Kolbe’’(جس کا مطلب ہے ہاکی نما چھڑی) یا ڈَچ زبان کے لفظ Kolf سے نکلا ہے۔ گالف میں …مزید پڑھیں

جو خواہاں ہیں ملے عزت ، کریں وہ دین کی خدمت – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 31؍جنوری 2013ء میں مکرم خواجہ عبدالمومن صاحب کی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب پیش ہے: جو خواہاں ہیں ملے عزت ، کریں وہ دین کی خدمت ملے گی حق تعالیٰ سے انہیں ہر گام پہ برکت خدائے قادر مطلق بنے گا حامی و ناصر عطا ہوگی انہیں …مزید پڑھیں

مکرم ملک محمد دین صاحب شہید

ماہنامہ ’’خالد‘‘ ربوہ کے مختلف شماروں میں چند شہدائے احمدیت کا تذکرہ حضرت خلیفۃالمسیح الرابعؒ کے خطباتِ جمعہ کے حوالے سے شامل اشاعت ہے۔ حضرت خلیفۃالمسیح الرابع رحمہ اللہ تعالیٰ نے شہدائے احمدیت سے متعلق اپنے خطباتِ جمعہ میں مکرم ملک محمد دین صاحب مرحوم کو بھی شامل فرمایا جو ساہیوال کیس میں اسیرراہ مولیٰ …مزید پڑھیں