رحمت کی آس میں مرا دستِ دُعا دراز – نظم

ماہنامہ ’’انصار اللہ‘‘ ربوہ ستمبر2007ء میں محترمہ مکرمہ سیدہ امۃ القدوس صاحبہ کے شائع ہونے والے کلام سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے:

رحمت کی آس میں مرا دستِ دُعا دراز
اِک نظرِ التفات سے مولا مجھے نواز
لمحے جدائیوں کے بہت ہوگئے طویل
فرقت کی لَے میں ڈوبی ہوئی ہے نوائے ساز
تیرے سوا ہے کون؟ تری ذات ہی تو ہے
مشکل کُشا ، مجیبِ دُعا ، ربِّ کارساز
تیرے ہی پاس ہے مرے ہر کرب کا علاج
چارہ گری کا کوئی کرشمہ! اے چارہ ساز

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں

ur اردو
X