مثالی عائلی زندگی

حضرت مسیح موعود علیہ السلام کی گھریلو زندگی مثالی تھی اور آپؑ فرمایا کرتے تھے کہ:
’’بیویوں سے خاوند کا ایسا تعلق ہو جیسے دو سچے اور حقیقی دوستوں کو ہوتا ہے‘‘۔
حضور ؑ کے برادرِ نسبتی حضرت ڈاکٹر میر محمد اسماعیل صاحب رضی اللہ عنہ بیان کرتے ہیں کہ ’’میں نے اپنی ہوش میں کبھی حضورؑ کو حضرت اماں جانؓ سے ناراض نہیں دیکھا نہ سنا، بلکہ ہمیشہ وہ حالت دیکھی جو ایک آئیڈیل جوڑے کی ہوتی ہے۔ بہت کم خاوند اپنی بیویوں کی دلداری کرتے ہیں جو حضورؑ حضرت اماں جانؓ کی فرمایا کرتے تھے‘‘۔
حضرت مسیح موعود علیہ السلام کے حسنِ سلوک اور خدمتِ خلق کے بعض پہلوؤں کا احاطہ محترم حافظ مظفر احمد صاحب کے مضمون میں کیا گیا ہے جو ماہنامہ ’’خالد‘‘ اگست 1995ء کی زینت ہے۔
اسی مضمون میں حضرت مسیح موعود علیہ السلام کا یہ ارشاد بھی نقل کیا گیا ہے کہ:
’’میرے پاس دعا کے لئے جو خط آتا ہے میں اسے پڑھ کر اس وقت تک ہاتھ سے نہیں رکھ دیتا جب تک دعا نہ کرلوں‘‘۔

پرنٹ کریں
0
یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [https://khadimemasroor.uk/f0pcd]

اپنا تبصرہ بھیجیں