میرے خدا مجھے اتنا تو معتبر کر دے – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 26جنوری 2011ء میں شامل اشاعت مکرم افتخار عارف صاحب کی ایک غزل سے انتخاب ملاحظہ فرمائیں:

میرے خدا مجھے اتنا تو معتبر کر دے
میں جس مکان میں رہتا ہوں اس کو گھر کر دے
یہ روشنی کے تعاقب میں بھاگتا ہوا دن
جو تھک گیا ہے تو اب اس کو مختصر کر دے
مری زمین ، مرا آخری حوالہ ہے
سو میں رہوں نہ رہوں اس کو بارور کردے
میں اپنے خواب سے کٹ کر جیوں تو میرا خدا
اُجاڑ دے مری مٹی کو در بدر کر دے

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں

ur اردو
X