وہ ایک شخص جو تازہ ہواؤں جیسا تھا – نظم

جماعت احمدیہ امریکہ کے ماہنامہ ’’النور‘‘ دسمبر 2010ء میں مکرم مرزا محمد افضل صاحب کی ایک غزل شائع ہوئی ہے جس میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے:

وہ ایک شخص جو تازہ ہواؤں جیسا تھا
مہک رہا تھا معطّر فضاؤں جیسا تھا
ہزاروں درد سے بے چین غم زدوں کے لئے
حصار امن ، محبت سراؤں جیسا تھا
اسی کے اشک سے روشن سبھی چراغ ہوئے
وہ خود غریب تھا لیکن عطاؤں جیسا تھا
وہ اپنی ذات میں اِک بے کراں سمندر تھا
خلوص و مہر و محبت میں ماؤں جیسا تھا

پرنٹ کریں
0
یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [https://khadimemasroor.uk/5KUIV]

اپنا تبصرہ بھیجیں