عشق کی راہ میں جب جب ملے آزار ہمیں … نظم

(مطبوعہ ’’الفضل ڈائجسٹ‘‘، الفضل انٹرنیشنل لندن 16؍دسمبر 2022ء)
روزنامہ’’الفضل‘‘ربوہ 29؍جنوری 2014ء میں شامل اشاعت مکرم عبدالصمد قریشی صاحب کی غزل میں سے انتخاب ہدیہ قارئین ہے:

عشق کی راہ میں جب جب ملے آزار ہمیں
اُس کی رحمت نے کیا پیار سے سرشار ہمیں
وہ سدا ساتھ رہا زیست کی ہر مشکل میں
اس نے چھوڑا نہیں بے یار و مددگار ہمیں
ہم کو حاصل ہوئی اک صبر و رضا کی دولت
اُس کے فضلوں نے کیا خوب ثمر بار ہمیں
ہم کو آتا نہیں اس راہِ وفا سے ہٹنا
آزمایا ہے زمانے نے کئی بار ہمیں
ایک عالم ہوا اب سچ کے دلائل کا شکار
اس نے بخشی ہے براہین کی تلوار ہمیں
اس نے ہی ہم کو یہ افکار کی دولت بخشی
اس نے ہی دی ہے حسیں قوتِ اظہار ہمیں

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں

ur اردو
X