انہیں زمیں سے اٹھاؤ یہ آبگینے ہیں – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 24؍جون 2006ء میں مکرم ناصر احمد سید صاحب کی ایک نظم ’’اشک کے نگینے‘‘ شائع ہوئی ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے:

انہیں زمیں سے اٹھاؤ یہ آبگینے ہیں
شکستہ لوگ نہیں ہیں یہ سب سفینے ہیں
تمام شب جو جلے ہیں نقیبِ شب بن کر
انہیں کے ہاتھ میں یہ صبح کے خزینے ہیں
سپرد جب سے کیا ہے تمہارے ہاتھوں میں
ہماری زندگی کے اَور ہی قرینے ہیں
کسی کے کام جو آئیں تو آ کے لے جائے
ہمارے پاس یہی اشک کے نگینے ہیں

پرنٹ کریں
0
یہ مضمون شیئر کرنے کے لئے یہ چھوٹا لنک استعمال کریں۔ جزاک اللہ [https://khadimemasroor.uk/c8rIu]

اپنا تبصرہ بھیجیں