آخری سانس تلک ساتھ نبھانا ہے ابھی – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 19؍ فروری 2011ء میں مکرم عطاء القدوس طاہرؔ صاحب کی سانحۂ لاہور کے حوالہ سے ایک نظم شائع ہوئی ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے:

آخری سانس تلک ساتھ نبھانا ہے ابھی
قرض کچھ اور بھی باقی ہے ، چکانا ہے ابھی
اب کے آنکھوں سے ٹپکنے نہیں دینا آنسو
مضطرب دل کو بھی اِک راز بتانا ہے ابھی
یوں نہ ہو دیر ، بہت دیر مقدّر ٹھہرے
پیار سے پیار کا اِک شہر بسانا ہے ابھی
اپنی آہوں کو دعاؤں میں بدل کے طاہرؔ
اپنے بھائیوں کا مجھے سوگ منانا ہے ابھی

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں

ur اردو
X