بیمار رو رہے ہیں مسیحا نہیں رہا … نظم

(مطبوعہ ’’الفضل ڈائجسٹ‘‘، الفضل انٹرنیشنل لندن 3؍جون 2024ء)

روزنامہ’’الفضل‘‘ ربوہ 3؍جولائی 2014ء میں مکرمہ امۃالباری ناصر صاحبہ کی ایک نظم شامل اشاعت ہے جو مکرم ڈاکٹر مہدی علی شہید کی شہادت کے حوالے سے کہی گئی ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے:

ڈاکٹر مہدی علی شہید

بیمار رو رہے ہیں مسیحا نہیں رہا
انسانیت کا خادمِ اعلیٰ نہیں رہا
ممکن نہیں ہے بہتے ہوئے اشک تھامنا
اب اختیار دل پہ ہمارا نہیں رہا
پیارے خدا نے چُن لیا تازہ حسین پھول
دنیا میں اب وہ آنکھ کا تارا نہیں رہا
وہ زندہ جاوداں ہے ملائک کی گود میں
کہنا نہیں اُسے کہ وہ زندہ نہیں رہا
پتھر سی ہو گئی ہیں زبانیں ہر ایک کی
بستی میں کوئی بولنے والا نہیں رہا
اپنا سب احتجاج ہے مولا ترے حضور
ترے سوا کوئی بھی سہارا نہیں رہا

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں