ترا پھول پھول چہرہ مَیں سدا بہار دیکھوں – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 18؍دسمبر 2002ء میں شامل اشاعت مکرم ضیاء اللہ مبشر صاحب کی ایک نظم سے انتخاب پیش ہے:

ترا پھول پھول چہرہ مَیں سدا بہار دیکھوں
وہ گھڑی کبھی نہ آئے تجھے بیقرار دیکھوں
تری دید سے سوا ہو، مرا شوقِ دید ہر پل
کہے چشم نم مچل کے تجھے بار بار دیکھوں
اے مرے حبیب آقا تجھ کو شفا مبارک
تجھ پہ خدا کی رحمت یونہی بیشمار دیکھوں

50% LikesVS
50% Dislikes
0

اپنا تبصرہ بھیجیں