آگ برساتی ہوئی اس دھوپ میں

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 8؍اپریل1995ء میں شائع شدہ مکرم آصف محمود باسط صاحب کی نظم کے دو اشعار ملاحظہ فرمائیے:

آگ برساتی ہوئی اس دھوپ میں
اک تمہاری ذات کا سایہ بہت
اک بہاروں تک نہیں محدود تھا
تو تو ہر موسم میں یاد آیا بہت
50% LikesVS
50% Dislikes
0

اپنا تبصرہ بھیجیں