اخلاص ہے دستورِ غلامانِ خلافت – نظم

ماہنامہ ’’مصباح‘‘ ربوہ مئی 2011ء میں شائع ہونے والی ایک نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: اخلاص ہے دستورِ غلامانِ خلافت تسلیم سے مشروط ہے پیمانِ خلافت یہ لعلِ نبوّت تو ہے اک گوہرِ یکتا بعد اس کے گراں مایہ ہے مرجانِ خلافت استادؐ سے شاگردؑ نے وہ فیض ہے پایا وہ شانِ نبوّت …مزید پڑھیں

خلافتِ احمدیہ کے مقام کے حوالے سے منتخب اشعار

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 25؍مئی 2013ء میں خلافتِ احمدیہ کے مقام کے حوالے سے منتخب اشعار شامل ہیں۔ ان میں سے بعض قبل ازیں ’’الفضل ڈائجسٹ‘‘ کا حصہ بنائے جاچکے ہیں۔ دیگر ذیل میں ہدیۂ قارئین ہیں: مکرم محمد صدیق امرتسری صاحب کے کلام سے انتخاب: امام وقت جب بھی منتخب ہوگا مشیت سے بدل جائیں …مزید پڑھیں

پیروں تلے زمیں نہیں سر پہ آسماں نہیں – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ یکم فروری 2013ء میں مکرمہ امۃالباری ناصر صاحبہ کی ایک غزل شامل اشاعت ہے۔ اس غزل میں سے انتخاب پیش ہے: پیروں تلے زمیں نہیں سر پہ آسماں نہیں لگتا ہے کُل جہان میں امن نہیں اماں نہیں اچھی خبر کے واسطے کان ترس ترس گئے خیر کی بات کہہ سکے ایسی …مزید پڑھیں

طنز کے تیر چلاتے ہیں جو ہر جانے انجانے پہ – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 9؍جنوری 2013ء میں محترمہ صاحبزادی امۃالقدوس صاحبہ کی ایک خوبصورت نظم شامل اشاعت ہے۔ اس طویل نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: طنز کے تیر چلاتے ہیں جو ہر جانے انجانے پہ شک کی نظریں ڈالتے رہتے ہیں اپنے بیگانے پہ چھوڑ انہیں جو لوگ کہ بگڑے جاتے ہیں سمجھانے پہ …مزید پڑھیں

جو خواہاں ہیں ملے عزت ، کریں وہ دین کی خدمت – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 31؍جنوری 2013ء میں مکرم خواجہ عبدالمومن صاحب کی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب پیش ہے: جو خواہاں ہیں ملے عزت ، کریں وہ دین کی خدمت ملے گی حق تعالیٰ سے انہیں ہر گام پہ برکت خدائے قادر مطلق بنے گا حامی و ناصر عطا ہوگی انہیں …مزید پڑھیں

صاحبِ لولاک ختم الانبیاء – نعت

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 7؍جنوری 2013ء میں مکرم مولوی ظفر محمد ظفر صاحب کی ایک نعت شامل اشاعت ہے۔ اس نعت میں سے انتخاب پیش ہے: صاحبِ لولاک ختم الانبیاء مقتدائے انبیاء و اصفیاء تیری آمد سے ہے یہ عقدہ کھلا ارفع و اعلیٰ ہے تُو بعد از خدا لاجرم ہے تُو ہی ختم الانبیاء تُو …مزید پڑھیں

یہ علم و فضل کا اِک بحرِ بے کراں ہیں سبھی – ںظم

روزنامہ‘‘الفضل’’ربوہ 3 جنوری 2013ء میں روحانی خزائن کے حوالے سے کہی گئی مکرم عبدالصمد قریشی صاحب کی ایک نظم شائع ہوئی ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ہدیہ قارئین ہے: یہ علم و فضل کا اِک بحرِ بے کراں ہیں سبھی جہاں میں حق و صداقت کی ترجماں ہیں سبھی چمک رہی ہیں یہ رفعت …مزید پڑھیں

دل مچلنے لگا کیا ہوا اے خدا کس کی رحمت مجھے آج گرما گئی – نعت

ماہنامہ ’’مشکوٰۃ‘‘ قادیان جون و جولائی 2012ء میں مکرم مبشر احمد صاحب وسیم گورداسپوری کی ایک نعت شامل اشاعت ہے۔ اس نعت میں سے انتخاب پیش ہے : دل مچلنے لگا کیا ہوا اے خدا کس کی رحمت مجھے آج گرما گئی آج بہلا گئی آج تڑپا گئی اور ابرِ کرم مجھ پہ برسا گئی …مزید پڑھیں

محمدؐ رحمۃٌ لِّلْعَالَمِیں ہیں
– نعت

ماہنامہ ’’مشکوٰۃ‘‘ قادیان جون و جولائی 2012ء میں مکرم مولوی محمد صدیق صاحب امرتسری کی ایک نعت شامل اشاعت ہے۔ اس نعت میں سے انتخاب پیش ہے: محمدؐ رحمۃٌ لِّلْعَالَمِیں ہیں محمدؐ نورِ جانِ مومنیں ہیں محمدؐ سالکِ راہِ مبیں ہیں شہِ ابرار و خَتْمُ الْمُرْسَلِیں ہیں محمد زینتِ عرشِ بریں ہیں محمدؐ سرورِ دنیا …مزید پڑھیں

شفق سمیٹے دھنک لپیٹے بدن میں اُس کے حیات اُتری – نظم

ماہنامہ ’’احمدیہ گزٹ‘‘ کینیڈا جون 2012ء میں مکرم طاہر عدیم صاحب کی ایک نظم بعنوان ’’ہدیہ عقیدت بحضور حضرت مسیح موعود علیہ السلام‘‘ شائع ہوئی ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: شفق سمیٹے دھنک لپیٹے بدن میں اُس کے حیات اُتری کہ جیسے ظُلمت میں نُور بن کر زمیں پہ اِک کائنات …مزید پڑھیں

سلام اُس پر کہ جو جامِ وصالِ یار لایا تھا – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ ربوہ 21؍مارچ 2015ء میں مکرم عبدالسلام صاحب کی ایک نظم بعنوان ’’روحانی مریضوں کا طبیب‘‘ شائع ہوئی ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: سلام اُس پر کہ جو جامِ وصالِ یار لایا تھا سلام اُس پر کہ جس نے مُردہ رُوحوں کو جِلایا تھا جسے اللہ نے عشقِ محمدؐ کی …مزید پڑھیں

یہ چاہتوں کے صحیفے اُتارتا ہے وہی – نظم

روزنامہ‘‘الفضل’’ربوہ 21؍مارچ 2013ء میں مکرم عبدالصمد قریشی صاحب کی درج ذیل نظم شامل اشاعت ہے: یہ چاہتوں کے صحیفے اُتارتا ہے وہی دلوں میں نقشِ محبت ابھارتا ہے وہی اُسی کے نُور سے ہے زندگی میں حُسن و جمال ہماری زیست کی راہیں اُجالتا ہے وہی وہ اپنے فضلوں سے کرتا ہے باثمر ہم کو …مزید پڑھیں

بات سنتے نہ بات کرتے ہو – نظم

ماہنامہ ’’تحریک جدید‘‘ ربوہ مئی 2012ء میں محترم چودھری محمد علی صاحب کی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ملاحظہ فرمائیں: بات سنتے نہ بات کرتے ہو کس قدر احتیاط کرتے ہو سچ کہو! انتظار کس کا ہے صبح کرتے نہ رات کرتے ہو عقل کے بھی ہو زر خرید غلام …مزید پڑھیں

جانِ حق جانِ مصلح موعود – نظم

ہفت روزہ ’’بدر‘‘ قادیان 9؍فروری 2012ء میں حضرت مصلح موعودؓ کے حوالہ سے مکرم غلام نبی ناظر صاحب کی ایک نظم شائع ہوئی ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: جانِ حق جانِ مصلح موعود شانِ حق شانِ مصلح موعود عاشقانِ نبیؐ کے تاروں میں ماہ تابان مصلح موعود حق شناس و حق …مزید پڑھیں

شکر صد شکر دلستاں آیا – نظم

روزنامہ ’’الفضل‘‘ 18؍فروری 2013ء میں حضرت مصلح موعودؓ کے حوالہ سے مکرم محمد ابراہیم شاد صاحب کی ایک نظم شائع ہوئی ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ملاحظہ فرمائیں: شکر صد شکر دلستاں آیا لِلّٰہ الْحمد مہرباں آیا ہر طرف ہے فضا مسرّت کی آج خوشیوں کا پھر سماں آیا ’مظہر الحق والعلا‘ بے شک …مزید پڑھیں

پیشگوئی مصلح موعود حق کو دیکھ کر – نظم

ہفت روزہ ’’بدر‘‘ قادیان 3و 10؍فروری 2011ء میں حضرت مصلح موعودؓ کی پیشگوئی کے حوالہ سے مکرم تنویر احمد ناصر صاحب کی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: پیشگوئی مصلح موعود حق کو دیکھ کر سامنے آنکھوں کے آ جاتا ہے وہ فرخ گُہر قدرتوں اور رحمتوں اور …مزید پڑھیں

چشمِ بینا سے کوئی دیکھے مقامِ محمود – نظم

ہفت روزہ ’’بدر‘‘ قادیان 9؍فروری 2012ء میں حضرت مصلح موعودؓ کے مقام کے حوالہ سے مکرم خلیل احمد مونگھیری صاحب کی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: چشمِ بینا سے کوئی دیکھے مقامِ محمود ہفت افلاک سے بھی ارفع ہے بامِ محمود ’وہ‘ یہ کہتے تھے کہ شیرازہ …مزید پڑھیں

اٹھارہ کے اُوپر چھیاسی تھے سال – نظم

ہفت روزہ ’’بدر‘‘ قادیان 3 و 10؍فروری 2011ء میں حضرت مصلح موعودؓ کی پیشگوئی کے حوالہ سے مکرمہ صاحبزادی امۃالقدوس صاحبہ کی ایک طویل نظم شائع ہوئی ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ملاحظہ فرمائیں: اٹھارہ کے اُوپر چھیاسی تھے سال کہ گویا ہوا یوں شہِ ذوالجلال سن اے میرے پیارے سخن دلپذیر کہ بیٹا …مزید پڑھیں

ماں کی ممتا ، چاند کی ٹھنڈک ، شیتل شیتل نُور – نظم

ماہنامہ ’’مصباح‘‘ ربوہ ستمبر 2011ء میں مکرمہ صاحبزادی امۃالقدوس صاحبہ کی اپنی والدہ (حضرت صاحبزادی ناصرہ بیگم صاحبہ) کی یاد میں کہی گئی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: ماں کی ممتا ، چاند کی ٹھنڈک ، شیتل شیتل نُور اس کی چھایا میں تو جلتی دھوپ بھی …مزید پڑھیں

چل بسی ہے حضرت اقدس کی پیاری والدہ – نظم

ماہنامہ ’’مصباح‘‘ ربوہ ستمبر 2011ء میں حضرت صاحبزادی ناصرہ بیگم صاحبہ کی وفات پر کہی گئی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ملاحظہ فرمائیں: چل بسی ہے حضرت اقدس کی پیاری والدہ جو تھی ربوہ کی مکیں اَب خُلد کی ہے خالدہ حضرتِ مسرور کی تھی اُمِّ فرخندہ جبیں سیرتِ رخشندہ …مزید پڑھیں

بہت سادہ سا گر انسان ہوتا – نظم

ماہنامہ ‘‘مصباح’’ ربوہ اگست 2011ء میں شاملِ اشاعت ایک نظم میں سے انتخاب ہدیۂ قارئین ہے: بہت سادہ سا گر انسان ہوتا دکھوں کا کتنے ہی درمان ہوتا مَن و تُو کا کبھی جھگڑا نہ ہوتا جو ہوتا تو فقط فیضان ہوتا محبت ہی محبت سب لُٹاتے نہ نفرت کا کوئی سامان ہوتا حرص ، …مزید پڑھیں

شب ہائے بے چراغ کی کوئی سحر بھی ہو – نظم

ماہنامہ ’’خالد‘‘ ربوہ جون 2012ء میں مکرم چودھری محمدعلی مضطرؔ صاحب کی درج ذیل غزل شامل اشاعت ہے: شب ہائے بے چراغ کی کوئی سحر بھی ہو اے لمحۂ فراق! کبھی مختصر بھی ہو کس طرح سے کٹے گی یہ کالی پہاڑ رات کوئی تو اس سفر میں ترا ہمسفر بھی ہو اتنا تو ہو …مزید پڑھیں

دل کی بستی کو محبت سے نہ خالی رکھنا – نظم

ماہنامہ ’’انصاراللہ‘‘ ربوہ اکتوبر 2011ء میں مکرم عبدالکریم قدسی صاحب کی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب پیش ہے: دل کی بستی کو محبت سے نہ خالی رکھنا اپنے آباء کی وراثت کو سنبھالی رکھنا عجز نے رفعتیں پائی ہیں ہمیشہ لوگو سچے ہو کر بھی طیبعت نہ جلالی رکھنا روشنی …مزید پڑھیں

انہیں خبر دو کہ تشنہ لب ہیں مریض سارے ہی مَے کدے میں – نظم

حضرت خلیفۃالمسیح الرابعؒ نے اپنی مشہور عالم نظم ’’دیار مغرب سے جانے والو دیارِ مشرق کے باسیوں کو …‘‘ جس نظم کے جواب میں کہی تھی، ماہنامہ ’’خالد‘‘ ربوہ اکتوبر 2011ء میں مکرم مبارک احمد ظفر صاحب کی وہ نظم شامل اشاعت ہے ۔ ذیل میں اس نظم میں سے انتخاب پیش ہے: انہیں خبر …مزید پڑھیں

سنگ باری میں مرا جسم چھپانے والو – نظم

ماہنامہ ’’خالد‘‘ ربوہ اگست 2012ء میں مکرم بشارت احمد صاحب کی ایک نظم شامل اشاعت ہے۔ اس نظم میں سے انتخاب ملاحظہ فرمائیں: سنگ باری میں مرا جسم چھپانے والو دعوتِ حق تمہیں دیتا ہوں زمانے والو اس میں کیا مَیں نے خوشی پائی ہے دونوں جگ کی تم نہ سمجھو گے مرا خون بہانے …مزید پڑھیں